Select Page

مردان

برصغیر میں انے والے ہر طالع آزما کی گزرگاہ مردان، پشاور اور مالاکنڈ ڈویژن کے درمیان واقع ہے۔ نوشہرہ، چارسدہ، مالاکنڈ ایجنسی، بونیر اور صوابی کے اضلاع میں گھرا مردان قدیم گندھارا تہذیب کا امین ہے جس کی باقیات آج بھی تخت بھائی، جمال گڑھی اور ساول ڈھیر کے مقامات پر کھنڈرات کی شکل میں موجود ہیں۔ مقامی معیشت کا دارومدار زراعت پر ہے۔ گندم، جو، گنا، تمباکو اور میوہ جات نقد آور فصلیں ہیں۔ یہاں کا ورجنیا تمباکو دنیا بھر میں مشہور ہے۔ یہ ضلع معدنیات کی دولت سے بھی مالا مال ہے۔ یہاں کا سنگ مرمر اپنی خوبصورتی کے حوالے سے اپنی الگ پہنچان رکھتا ہے۔ مردان کے چپلی کباب اپنے ذائقے کی وجہ سے مشہور ہیں۔ سوات اور مالاکنڈ میں طالبائزیشن کی وجہ سے مردان کے دیہی علاقے بھی متاثر ہوئے ہیں۔